Ad

پاکستان میں 5G سروس دسمبر 2022 یا جنوری 2023 تک شروع کردی جائے گی

    

 وفاقی وزیر برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی و ٹیلی کمیونیکیشن امین الحق نے کہا ہے کہ 5 جی سروسز دسمبر 2022 یا جنوری 2023 تک شروع کر دی جائیں گی، ابتدائی طور پر فائیو جی سروس پانچ بڑے شہروں میں شروع کی جائے گی۔

وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی اور ٹیلی کمیونیکیشن نے  G5 سپیکٹرم کی نیلامی کے لیے ایڈوائزری کمیٹی کی تشکیل کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے۔

وفاقی کابینہ کے فیصلے کے مطابق وزیر خزانہ شوکت ترین کی سربراہی میں مشاورتی کمیٹی 13 ارکان پر مشتمل ہوگی جس میں وفاقی وزیر آئی ٹی و ٹیلی کمیونیکیشن امین الحق اور وزیر سائنس و ٹیکنالوجی شبلی فراز شامل ہیں۔

اس حوالے سے وفاقی وزیر امین الحق کا کہنا تھا کہ کمیٹی بین الاقوامی معیار کے مطابق پاکستان میں دستیاب اور استعمال ہونے والے سپیکٹرم کا جائزہ لے گی۔ کمیٹی فائیو جی سروسز شروع کرنے کے لائحہ عمل کا جائزہ لینے کے بعد اس کی منظوری دے گی۔

انہوں نے کہا کہ اسٹیک ہولڈرز بالخصوص ٹیلی کام کمپنیوں سے بھی حکمت عملی کے منصوبے کے لیے مشاورت کی جائے گی۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ کمیٹی کنسلٹنٹ کی تجاویز کی روشنی میں 5 جی سپیکٹرم کی نیلامی کے طریقہ کار کی بھی منظوری دے گی۔ ٹیلی کام سیکٹر کے خدشات کو مدنظر رکھتے ہوئے 5G سپیکٹرم کی نیلامی کو قابل عمل بنایا جائے گا۔

ref: Gee News

Post a Comment

0 Comments